جب تک ”اگر مگر“ ختم نہیں ہوتا ہمت نہیں ہاریں گے، اظہر محمود

قومی ٹیم کی بھارت سے شکست کے بعد نیو یارک میں پاکستان کرکٹ ٹیم کے اسسٹنٹ کوچ اظہر محمود نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ دو شکستوں کے بعد سب کافی مایوس ہیں، خاص طور پر انڈیا سے میچ ہارنے کا دکھ امریکہ کے خلاف ہارنے سے زیادہ ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہماری شاٹ سلیکشن درست نہیں تھی جس کی وجہ سے 6 کا رن ریٹ 10 پر چلا گیا، ہم کل 15ویں اوور تک ٹھیک کھیل رہے تھے۔

پاکستان کے اسسٹنٹ کوچ نے مزید کہا کہ ہم بطور ٹیم ہارے ہیں، انفرادی طور پر کسی کو زمہ دار نہیں ٹھہرا سکتے، دونوں میچوں میں ہماری شاٹ سلیکشن اور فیصلے ٹھیک نہیں تھے، کل غلط وقت پر غلط شاٹ کھیلنے کی وجہ سے میچ ہاتھ سے نکل گیا۔

مزید پڑھیں:
ٹیم میں بڑی سرجری کے بجائے خود ساختہ سرجن محسن نقوی مستعفی ہوں، رہنما جے یو آئی حافظ اللّٰہ

اظہر محمود کا کہنا تھا کہ اس وقت ٹیم میں ہر کسی کا مورال نیچے ہے، ہم اب بھی واپس آسکتے ہیں، کینیڈا کے خلاف میچ ہمارے لیے بہت اہم ہے، کرکٹ میں اگر مگر ہمیشہ رہتا ہے، پہلے بھی رہا ہے، جب تک ختم نہیں ہوتا ہم ہار نہیں مانیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر کسی کھلاڑی کو اپنی صلاحیت پر شک ہونے لگے تو یہ بہت مشکل ہوتا ہے، اگر ہم خود پر اعتماد رکھ کر کھیلیں تو سب کو غلط ثابت کر سکتے ہیں۔

اظہر محمود نے کہا کہ اسٹرائیک ریٹ پر بابر اور رضوان پر سارا بوجھ آجاتا ہے، اگر اچھی پارٹنرشپ نہ ہو سکے تو پھر دباؤ میں آجاتے ہیں، اگر ہم صحیح وقت پر صحیح فیصلے لیں تو چیزیں آسان ہو جائیں گی۔

انکا مزید کہنا تھا کہ نسیم شاہ اور شاہین آفریدی سے بیٹنگ کی توقع نہیں رکھ سکتے، یہ ابتدائی 7 بیٹرز کا کام ہے، اگر ٹاپ آرڈر نہیں پرفارم کرے گا تو باقی لوگوں سے کیا توقع کریں؟

مزید پڑھیں:
آئی سی سی ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ، پاکستان ٹیم کا سفر اگر مگر کا شکار

اظہر محمود نے کہا کہ ناکامی کی ذمہ داری ہم پوری مینجمنٹ لے گی، ہم سب کی غلطیاں ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں اظہر محمود نے کہا کہ میچ ہار جائیں تو کیا کھلاڑی کی زندگی ختم ہو جاتی ہے؟ کیا کمرے میں بیٹھ کر دیوار پر سر ماریں؟

انہوں نے کہا کہ ہار جاتے ہیں تو سب کہتے ہیں کہ یہ چیز نہیں کر رہے وہ نہیں کر رہے، جسمانی مشقوں سے کچھ نہیں ہوگا، اس وقت ذہنی مضبوطی بہت اہم ہے۔

اسسٹنٹ کوچ نے مزید کہا کہ اب کسی خوش فہمی میں رہنے کی گنجائش نہیں، اگر کوئی کسی حریف کو ہلکا سمجھتا ہے تو اس کی انٹرنیشنل کرکٹ میں جگہ نہیں، کینیڈا کے پاس بھی ایسے کھلاڑی ہیں جو اچھا کھیل سکتے ہیں، ہمیں اب یہ میچ ہر حال میں جیتنا ہو گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں