ٹیم میں بڑی سرجری کے بجائے خود ساختہ سرجن محسن نقوی مستعفی ہوں، رہنما جے یو آئی حافظ اللّٰہ

جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی) کے رہنما نے آئی سی سی ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ میں بھارت کے ہاتھوں قومی ٹیم کی شکست پر پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین محسن نقوی سے استعفیٰ دینے کا مطالبہ کر دیا۔

جمعیت علماء اسلام کے رہنما حافظ حمد اللّٰہ نے چیئرمین پی سی بی محسن نقوی کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ٹیم میں بڑی تبدیلیاں کرنے کی بجائے چیئرمین بورڈ خود استعفیٰ دیں۔

حافظ حمد اللّٰہ نے مزید کہا کہ چیئرمین صاحب، آپ کی منتخب کردہ ٹیم نے قوم کی ناک کٹوا دی ہے، خود ساختہ سرجن چیئرمین بورڈ کے ذریعے تبدیلیاں کرنے سے ملک اور قوم کی بدنامی ہو گی۔

مزید پڑھیں:
میچ جیتنے کیلئے سادہ سی حکمت عملی بنائی تھی، کپتان بابراعظم

جے یو آئی کے رہنما کا مزید کہنا تھا کہ پی سی بی پر جب سے موجودہ چیئرمین کو زبردستی مسلط کیا گیا ہے تب سے قومی ٹیم لڑ کھڑا رہی ہے، اگر محسن نقوی اتنے ہی قابل ہیں تو انہیں منتخب کرنے والے ان کو اپنا عہدہ بھی دے دیں۔

واضح رہے کہ قومی ٹیم کی شکست کے بعد محسن نقوی نے کہا کہ “لگتا تھا کہ کرکٹ ٹیم کا چھوٹی تبدیلیوں سے کام چل جائے گا، لیکن آج کی انتہائی خراب کارکردگی کے بعد یقین ہو گیا ہے کہ ٹیم میں بڑی تبدیلیوں کی ضرورت ہے“

چیئرمین پی سی بی کا کہنا تھا کہ ”وقت آ گیا ہے کہ باہر بیٹھے ٹیلنٹ کو موقع دیا جائے، قوم جلد ہی بڑی تبدیلیاں ہوتے ہوئے دیکھے گی، ہمارا سب سے بڑا چیلنج ٹیم کی کارکردگی کو بہتر بنانا ہے“

اپنا تبصرہ بھیجیں