وزیراعظم کی جانب سے ہاکی ٹیم کے لیے لاکھوں روپے کے اعلانات

وزیراعظم ہاؤس میں آج بروز جمعرات کو اذلان شاہ کپ ٹورنامنٹ میں سلور میڈل جیتنے والی پاکستان ہاکی ٹیم اور اس کی مینجمنٹ کے اعزاز میں ایک خاص تقریب منعقد کی گئی، جس میں وزیراعظم شہباز شریف نے کھلاڑیوں کو ان کی شاندار کارکردگی پر خراج تحسین پیش کیا۔

اس تقریب میں وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات عطا اللّٰہ تارڑ، وفاقی وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال، وزیراعظم یوتھ پروگرام کے چیئرمین رانا مشہود احمد خان، وزیر مملکت برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی شزہ فاطمہ، پاکستان ہاکی فیڈریشن کے عہدیداراوں اور کھلاڑیوں نے بھی شرکت کی۔

ہاکی فیڈریشن کے پیٹرن انچیف اور وزیراعظم نے ہر کھلاڑی کو دس دس لاکھ روپے کے چیک دیے۔ انہوں نے چیئرمین پرائم منسٹر یوتھ پروگرام رانا مشہود احمد کو ہدایت دی کہ وہ پاکستان کے تمام ڈیپارٹمنٹ کی ہاکی ٹیموں کو ان کے پرانے نوٹیفکیشن کے مطابق بحال کرائیں اور ایک ہفتے کے اندر رپورٹ پیش کریں۔


وزیر اعظم شہباز شریف نے اس تقریب میں کھلاڑیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے پندرہ سے بیس سال سے ہاکی کا کھیل زوال پذیر تھا، مگر قوم گواہی دے رہی ہے کہ ہاکی ٹیم ہاری نہیں، جیتی ہے۔ میں پاکستان ہاکی ٹیم کی کارکردگی سے بہت متاثر ہواہوں اور مجھے یقین ہے کہ ہاکی کا کھیل دوبارہ اپنی بلندی پر پہنچے گا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ہاکی ٹیم کی یہ کارکردگی مستقبل کی کامیابی کی علامت ہے، ہم ہاکی کے کھیل کو بہتر بنانے کے لیے کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے، گزشتہ دور حکومت کے سولہ مہینے ہمارے لیے انتہائی مشکل تھے، لیکن ان مشکلات کے باوجود ہم نے ملکی معیشت کو بہتر بنایا۔

اس موقع پر پاکستان ہاکی ٹیم کے سابق کپتان شہباز احمد نے کہا کہ تقریب میں شرکت کر کے ہمیں بہت خوشی محسوس ہو رہی ہے، وزیراعظم نے کھلاڑیوں کی بھرپور حوصلہ افزائی کی اور انشااللہ پاکستان کے لیے میڈلز جیت کر لائیں گے۔

بنوں سے تعلق رکھنے والے ہاکی ٹیم کے کھلاڑی سفیان نے کہا کہ آج وزیراعظم کے ساتھ بیٹھ کر ایسا لگ رہا ہے، جیسے کوئی خواب دیکھ رہا ہوں کیونکہ پچھلے وزیراعظم نے تو ہمارا ہاکی کا سارا سسٹم ہی ختم کر دیا تھا اور ڈیپارٹمنٹ سپورٹس بھی ختم کر دی تھیں۔

سابق اولمپین فلائنگ ہارس سمیع اللّٰہ نے کہا کہ قومی ہاکی ٹیم کے کھلاڑیوں کی وجہ سے ہمیں اس تقریب میں شرکت کا موقع ملا ہے، ہماری دعا ہے کہ پاکستان میں ہاکی فروغ پائے، ہاکی کے کھلاڑیوں کی حوصلہ افزائی اسی طرح ہونی چاہیے اور کھلاڑیوں کو بھی اپنی کارکردگی سے ثابت کرنا ہو گا کہ وہ پاکستان کے لئے میڈلز جیت کر لا سکتے ہیں۔

پاکستان ہاکی ٹیم کے سنٹر فارورڈ عبدالرحمان نے کہا کہ میں نے پہلی مرتبہ بین الاقوامی سطح پر مقابلے میں حصہ لیا ہے، اذلان شاہ ہاکی ٹورنامنٹ کے فائنل میں جاپان سے ہونے والی شکست کا بدلہ جلد لیں گے۔ پاکستان ہاکی ٹیم کے کپتان عماد بٹ نے کہا کہ ٹیم نے اپنی کارکردگی میں کوئی کمی نہیں چھوڑی اور انشاء اللّٰہ آگے چل کر ملک کے لئے مزید کامیابیاں حاصل کریں گے۔

سابق اولمپین صلاح الدین نے کہا کہ ہاکی ٹیم کے کھلاڑیوں نے بہت محنت کی ہے، وزیراعظم کھیلوں اور کھلاڑیوں سے محبت کرتے ہیں، انہوں نے محسوس کیا کہ ان کھلاڑیوں کو حوصلہ افزائی کی ضرورت ہے، ہاکی ہمارا قومی کھیل ہے اور اگر کھلاڑیوں کو تھوڑی سی توجہ ملے تو وہ ملک کے لئے جان لڑا دیتے ہیں۔ اس موقع پر وزیراعظم نے پاکستان ہاکی ٹیم کے کھلاڑیوں، ایتھلیٹ ارشد ندیم، اور پیرس اولمپکس کے لئے کوالیفائی کرنے والی رایفل شوٹنگ ٹیم کے ارکان میں بھی چیک تقسیم کئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں