عالمی شہرت یافتہ باکسر عامر خان پاکستان آرمی میں بطور کپتان بھرتی ہو گئے

پاک فوج کی جانب سے ایک پروقار تقریب میں عالمی شہرت یافتہ باکسر عامر خان کی باکسنگ کے میدان میں کامیابیوں کو سراہتے ہوئے ایک دن کے لئے اعزازی کیپٹن کے رینکس لگائے گئے۔ عامر خان نے اپنے شاندار کیریئر میں بہت ساری کامیابیاں حاصل کی۔ انہوں نے 2004ء کے اولمپکس مقابلوں میں لائٹ ویٹ کیٹیگری میں صرف 17 سال کی عمر میں چاندی کا تمغہ جیتا تھا۔

اعزازی کیپٹن کا رینک لگانے کے بعد باکسر عامر خان نے کہا کہ پاک فوج نے ہمیشہ کھیلوں کے فروغ میں اہم کردار ادا کیا ہے، آج یہ اعزاز ملنے کے بعد میں بے حد فخر محسوس کر رہا ہوں، پاک فوج کا یونیفارم پہن کر اور رینکس لگا کر وہی خوشی محسوس کر رہا ہوں جیسی خوشی مجھے عالمی چیمپئن بننے پر محسوس ہوئی تھی۔

انہوں نے مزید کہا کہ میں نے پاک فوج کو ہمیشہ سپورٹ کیا ہے کیونکہ یہ ہمارا فخر ہے، آج پاک فوج کا یونیفارم پہن کر بہت خوشی محسوس کر رہا ہوں، میں پاکستان میں کھیلوں کے فروغ کیلئے اپنا کردار ادا کرتا رہوں گا، پاکستانی نوجوانوں کو کھیلوں میں زیادہ سے زیادہ حصہ لینا چاہئے۔

باکسر عامر خان کا کہنا تھا کہ میرا پاکستان میں مزید باکسنگ اکیڈمیز کھولنے کا ارادہ ہے تا کہ نوجوان باکسرز کی تربیت کی جائے، انشاء اللّٰہ ہم ایک دن کامن ویلتھ اور اولمپکس میں تمغے جیتیں گے، میری آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر سے بھی ملاقات ہوئی ہے، میں پاک فوج کا شکر گزار ہوں جنہوں نے میری عزت افزائی کی۔

انہوں نے کہا کہ میں جب کبھی پاکستان آتا ہوں تو پاک فوج کی وجہ سے خود کو بہت محفوظ محسوس کرتا ہوں، میرا نوجوانوں کو یہ پیغام دینا چاہتا ہوں کہ وہ فوکس رہیں، محنت کریں اور خود اعتمادی پہ یقین رکھیں۔ تقریب کے اختتام پر باکسر عامر خان پاکستان آرمی کے جوانوں اور افسروں کے ساتھ گھل مل گئے اور انکے ساتھ وقت گزارا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں