کینیڈا میں پاکستانی سٹوڈنٹس کے لیے تعلیمی مواقع بڑھنے کا امکان

پاکستان اور کینیڈا کا دوطرفہ سیاسی مشاورت کا پانچواں دور اوٹارا میں منعقد ہوا جس میں پاکستان سے وفد کی قیادت ایڈیشنل سیکرٹری خارجہ اور امریکہ میں پاکستانی سفیر مرہم آفتاب نے کی جبکہ کینیڈا کی طرف سے اسسٹنٹ ڈپٹی منسٹر انڈو پیسیفک ویلڈن ایپ, عالمی امور کینیڈا نے وفد کی قیادت کی. دونوں فریقین نے دو طرفہ تعلقات کے تمام پہلووں کا مکمل جائزہ لیا

ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ اس اجلاس میں خاص طور پر تجارت, سرمایہ کاری, تعلیم, پارلیمانی تبادلوں, انسداد دہشت گردی اور عوامی رابطوں کے شعبے میں مزید تعاون کے مواقع اور امکانات کی نشاندہی کی گئی. ایڈیشنل سیکرٹری خارجہ نے کینیڈین فریق کو پاکستان کی خارجہ پالیسی کی ترجیحات سے آگاہ کیا اور کینیڈین کمپنیوں کو پاکستان میں توانائی, کان کنی اور آئی ٹی کے شعبوں میں سرمایہ کاری کرنے کی دعوت دی.

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق فریقین نے دو طرفہ تعلقات میں مجموعی پیشرفت پر اطمینان کا اظہار کیا، دونوں ممالک کے درمیان باہمی دلچسپی کے تمام شعبوں میں تعاون بڑھانے کے عزم کا بھی اظہار کیا اور اقوام متحدہ سمیت بین الاقوامی فورمز پر تعاون پر بھی تبادلہ خیال کیا اور تعاون اور بات چیت کو مزید مستحکم کرنے پر بھی اتفاق کیا گیا اور اس کے ساتھ ہی علاقائی اور عالمی صورتحال پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق کینیڈین وفد کو جنوبی ایشیائی خطے بالخصوص افغانستان, پاک بھارت اور بھارت کے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے حوالے سے بھی حالیہ پیش رفت سے آگاہ کیا گیا. مزید برآں, دوطرفہ سیاسی مشاورت کا چھٹا دور باہمی مناسب تاریخوں پر اسلام آباد میں ہوگا

اپنا تبصرہ بھیجیں